شہباز گل کا ن لیگ کے دور میں میٹرو بس کا ٹھیکہ من پسند کمپنی کو دینے بارے بیان، وزیراعظم کے معاون خصوصی پر ترک کمپنی نے مقدمہ دائر کردیا

لاہور(این این آئی) وزیر اعظم کے معاون خصوصی ڈاکٹر شہباز گل کیخلاف ہرجانہ دعوے کی سماعت 16جنوری تک ملتوی کر دی گئی۔ ایڈیشنل سیشن جج چوہدری ذولفقار علی نے درخواست پر سماعت کی۔ وزیراعظم کے معاون خصوصی شہبا ز گل اپنے وکیل کے ہمراہ عدالت میں پیش ہوئے۔میٹرو بس کے ٹھیکہ دینے کے بیان پر ترک کمپنی

نے ہر جانے کا دعوی دائر کر رکھا ہے۔شہباز گل کے وکلا ء نے اپنا وکالت نامہ جمع کرا دیا۔ایڈیشنل سیشن جج چوہدری ذوالفقار نے شہباز گل کو درخواست کی کاپی فراہم کرتے ہوئے سماعت 16 جنوری تک ملتوی کردی۔دوسری جانب وزیر اعظم کے معاون خصوصی ڈاکٹر شہباز گل نے لیگی کارکنوں کی جانب سے اپنی گاڑی پر حملے کا الزام عائد کر تے ہوئے کہا ہے کہ عدالت سے نکلتے وقت ان کی گاڑی پر حملہ کیا گیا۔ہرجانہ کیس میں عدالت میں پیشی کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ لیگی کارکنوں نے عدالت سے باہر نکلتے وقت ان کی گاڑی پر حملہ کیا،میرے گاڑی پر مکے برسائے گئے اور اس موقع پر موجود پولیس نے بیچ بچا ؤکروایا۔انہوں نے کہا کہ جب آپ مافیا سے ٹکر لیتے ہیں تو پھر ایسا تو ہوتا ہی ہے لیکن اللہ پر پختہ یقین ہے، گھبرانے والا نہیں، عمران خان کا سپاہی ہوں اور مافیا سے کسی طرح گھبرا کر پیچھے نہیں ہٹوں گا۔ا نہوں نے مزید کہا کہ سابقہ دور میں میٹرو بس کا ٹھیکہ دیا گیا تو ایک کمپنی نے ٹینڈ بھرا،اب تحریک انصاف کی حکومت میں تین کمپنیاں بولی میں شامل ہوئی،ہماری حکومت نے میٹرو بس کے ٹینڈر انتہائی کم قیمت میں دئیے،شہباز شریف نے میٹروبس کا وہی ٹینڈر 100 فیصد مہنگا دیا،ٹینڈ مہنگا دینے کے پیچھے ایک مقصد کمیشن تھا۔ انہوں نے کہا کہ میں

نے کمپنی کے خلاف نجی ٹی وی شو میں باتیں کیں ہیں جس پر کمپنی نے کیس کر دیا۔ اس ٹھیکے کی بات کرنے پر میرے خلاف شہباز شریف کی من پسند کمپنی نے کیس کر دیا۔ انہوں نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان کے حکم پر عوامی پیسے کو بچایا جا رہا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں