کورونا ٹیسٹ کا نتیجہ اب کتنی دیر میں آ جائے گا؟حکومت کا زبردست اعلان

لاہور(ویب ڈیسک)وفاقی حکومت نے عالمی وبا کورونا وائرس کی تشخیص کے لیے ریپڈ ٹیسٹ کٹ کے استعمال کی منظوری دے دی۔نیشنل کمانڈ اینڈ کنٹرول سینٹر (این سی او سی) کی جانب سے تمام صوبائی حکومتوں کو مراسلہ لکھ دیا گیا ہے۔ نئی کٹ کے استعمال سے کورونا ٹیسٹ کا نتیجہ 20 منٹ میں آجائے گا۔

اس ضمن میں جاری مراسلے کے مطابق منظورشدہ سرکاری و پرائیویٹ لیبارٹریز ہی نئی کٹ کے تحت ٹیسٹ کر سکیں گی۔مراسلے میں کہا گیا ہے کہ ہائی رسک سیکٹر میں 20 فیصد پی سی آر ٹیسٹ اور باقی نئی کٹ سے ہوں گے، فیز ون کی کامیابی کے بعد نئی کٹ سے تمام پرائیویٹ لیبز پر ٹیسٹ کی سہولت ملے گی۔نئی ٹیسٹ کٹ کے تحت 20 نومبر سے ٹیسٹ کیے جائیں گے، صوبائی حکومتیں عالمی ادارہ صحت سے منظور کمپنیوں سے نئی کٹ خریدیں گے۔ مراسلے کے مطابق نئے طریقے کار کے تحت ٹیسٹ کی قیمت کا تعین وفاقی اور صوبائی حکومتیں خود سے کریں گی۔خیال رہے کہ پاکستان میں پی سی آر سے کورونا وائرس کا ٹیسٹ کیا جا رہا ہے۔دوسری جانب ایک اور خبر کے مطابق لک بھرمیں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا وبا کے مزید 1 ہزار650 افراد کورونا وائرس کا شکارہوئے۔این سی اوسی کے مطابق ملک بھرمیں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 1 ہزار650 افراد کورونا وائرس کا شکارہوئے اور9 مریض کورونا کے باعث زندگی کی بازی ہار گئے جس کے بعد کورونا وائرس کے کیسز کی تعداد 3 لاکھ 44 ہزار 839 اورمجموعی اموات کی تعداد 6 ہزار 977 ہوگئی۔این سی اوسی کے مطابق ملک بھرمیں ایکٹو کیسزکی تعداد 18 ہزار981 ہوگئی، گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 33 ہزار 340 کورونا ٹیسٹ کیئے گئے، اب تک صحتیاب ہونے والوں کی تعداد 3 لاکھ 18 ہزار 881 ہے۔سندھ میں مریضوں کی تعداد 1 لاکھ 50 ہزار 169 ، پنجاب میں 1 لاکھ 6 ہزار 922 اورخیبرپختونخواہ 40 ہزار 657تعداد، اسلام آباد میں 21 ہزار 861 اوربلوچستان میں 16 ہزار 106 تعداد ہوگئی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں