دنیا بھر میں ہلچل مچا دینے والی خبر آگئی

یروشلم (ویب ڈیسک) جوبائیڈن کے صدر بنتے ہی ایران امریکہ تصادم کے حوالے سے بڑی پیشگوئی کر دی گئی ،اسرائیلی وزیر نے الٹی میٹم دیتے ہوئے کہا کہ جوبائیڈن کے صدر منتخب ہو تے ہی ایران امریکہ تعلقات ایک دفعہ پھر کشیدہ ہو جائینگے ،اسرائیلی وزیر کا کہنا تھا کہ ممکنہ امریکی صدر

جوبائیڈن کامیابی کی صورت میں ایران کے ساتھ امریکی جوہری معاہدہ نئے سرے سے کرنے کی طرف جا سکتے ہیں جس کی وجہ سے ایران ،امریکہ ،اسرائیل تعلقات تصادم کی طرف جا سکتےہیں ۔تفصیلات کے مطابق اسرائیلی وزیر نے انکشاف کیا کہ ممکنہ امریکی صدر کےآتے ہیں ایران کیساتھ کیا گیا جوہری معاہد ہ خطرے میںپڑ جائیگا ،ان کا کہنا تھا کہ جب بائیڈن نائب امریکی صدر بھی تھے تو اس وقت بھی انہوں نے ایران کے ساتھ ہونے والے جوہری معاہدے کی مخالفت کی تھی ،اسرائیلی وزیر نے خبردار کیا کہ اگر جوبائیڈن اپنے اسی موقف پر قائم رہے تو یقینی طور پر ٹرمپ کی طرف سے کیے گیا جوہری معاہدہ اور پابندیوں کو نئے قواعد وضوابط کیساتھ پیش کیا جائیگا جو ایران کیلئے انہتائی مشکل ہو گا ۔جوبائیڈن کی طرف سے ممکنہ نئے جوہری معاہدے کی وجہ سے اسرائیلی وزیر نے پیشگوئی کی کہ اس نئے جوہری معاہدے کی وجہ سے ایران ،اسرائیل اور امریکہ کے تعلقات پہلے سے کہیں زیادہ کشیدہ ہو جائینگے جو ایک بڑے تصادم کی طرف بھی بڑھ سکتے ہیں ۔اسرائیلی وزیر اعظم سمیت متعدد اعلیٰ حکام 2015 کے معاہدے کو ایک غلطی قرار دے رہے ہیں ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں