حکومت کا اہم اقدام :دوست ملک سے 44پاکستانی قیدی وطن پہنچ گئے

لاہور(ویب ڈیسک)حکومت کی جانب سے سری لنکا سے پاکستانی قیدیوں کی منتقلی کے حوالے سے خبر سامنے آ ئی ہے جس کے مطابق سری لنکا سے 44 پاکستانی قیدیوں کو ملک میں منتقل کیا گیا ہے۔قومی ایئر لائن پی آئی اے کی پرواز آج صبح ان 44 قیدیوں کو لے کر وطن پہنچ گئی۔سرکاری ذرائع کے مطابق یہ

44 قیدی پاکستان اور سری لنکا کے درمیان معاہدے کے تحت واپس لائے گئے ہیں۔ہر قیدی کے لیے انٹرنیشنل پرٹوکول کے تحت مخصوص اہل کار پرواز میں بھیجے گئے تھے۔سرکاری ذرائع کا مزید کہنا ہے کہ اس ضمن میں نادرا، ایف آئی اے اور دیگر متعلقہ داروں کے اہل کاروں کی خصوصی ڈیوٹیاں لگا دی گئی ہیں۔سرکاری ذرائع یہ بھی بتاتے ہیں کہ یہ 44 قیدی اپنی باقی میعاد پاکستان کی قیدمیں گزاریں گے۔اس کے علاوہ قیدیوں کی فل سکریننگ کی گئی اور کرونا ٹیسٹ بھی کئے گئے ۔یاد رہے کہ قبل ازیں دبئی کی قید سے 410 پاکستانی قیدیوں کو رہا کر دیا گیا تھا۔دبئی قونصل خانے کی جانب سے جاری کیے گئے اعلامیے کے مطابق رہا ہونے والے پاکستانی قیدیوں کو 2 طیاروں کے ذریعے پاکستان بھیجا گیا، پاکستانی قیدیوں کو فیصل آباد، پشاور منتقل کیا گیا۔دبئی قونصل خانےکے اعلامیے کے مطابق دو سو زائد قیدیوں کو فلائٹ آپریشن کی بندش سے پہلے پاکستان بھجوایا جا چکا تھا۔ واضح رہے کہ کورونا وائرس پھیلنے کے بعد سے دبئی حکومت کی جانب سے 700 پاکستانی قیدی رہا کیے جا چکے ہیں۔علاوہ ازیں قیدیوں کی رہائی کے سلسلے میں وزیرِ اعظم پاکستان عمران خان نے ملائیشین حکومت سے بھی رابطہ کیا تھا، قیدیوں کی واپسی کے پروگرام کی نگرانی ملائیشیا میں موجود پاکستانی قونصلر آمنہ بلوچ نے کی۔ملائیشیا میں موجود پاکستانی ہائی کمشنر آمنہ بلوچ کے مطابق عید سے قبل 3 فلائٹس کے ذریعے تمام پاکستانی قیدیوں کی وطن واپسی کو یقینی بنایا جائے گا۔ قیدیوں اور ان کے سامان کی خصوصی اسکریننگ کی گئی اور انہیں لاہور کےمختلف قرنطینہ سینٹروں میں منتقل کیا گیا تھا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں