فوج مخالف بیانیہ (ن)لیگ کو لے ڈوبا! ناراض لیگی رہنماؤں کی بڑی تعداد نے کس سے رابطہ کر لیا؟ شریف خاندان کو بڑا دھچکا لگنے کا امکان

اسلام آباد (نیوز ڈیسک ) مسلم لیگ ن کے اہم رہنما کئی لوگوں کے ساتھ رابطے میں ہیں، جو کہ فیصلہ کن مرحلے میں داخل ہوچکے ہیں، کیوں کہ وہ مزید یہ بردشت نہیں کرنا چاہتے کہ ان کی پارٹی قیادت فوج پر اس طرح کیچڑ اچھالتی رہے، یا کسی ایسے ایجنڈے کو آگے بڑھائے

جس کا پاکستان کی ریاست کو نقصان جب کہ بھارت کو فائدہ ہو، ان خیالات کا اظہار اینکر پرسن عمران ریاض خان نے کیا۔تفصیلات کے مطابق اپنے یوٹیوب چینل میں انہوں نے بتایا کہ ناراض رہنماؤں کی طرف سے کہا گیا ہے کہ ان کی قیادت کی طرف سے دیے گئے بیانات کی وجہ سے ان میں بے چینی پائی جاتی ہے اور وہ اس سلسلے میں جلد کوئی نہ کوئی فیصلہ کرنا چاہتے ہیں کہ اس حوالے سے کسی مناسب فورم پر آواز اٹھائی جائے۔اینکر پرسن عمران ریاض خان نے کہا کہ مسلم لیگ ن کی پارٹی قیادت کے اجلاس میں سابق اسپیکر قومی اسمبلی ایاز صادق کے بیان پر اظہار ندامت یا معذرت کی بجائے ان کی طرف سے ایاز صادق کے ساتھ اظہار یکجہتی کیا گیا،اور ان کے ساتھ کھڑے ہونے کا فیصلہ کرلیا گیا۔دوسری جانب مسلم لیگ ن کے ایک اور رکن پنجاب اسمبلی اظہر عباس چانڈیہ ے وزیر اعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار سے ملاقات کی ہے ، اظہر عباس چانڈیہ نے عثمان بزدار کو علاقے کے مسائل سے آگاہ کیا اور کہا کہ آپ نے ہمیشہ ہماری بات سنی ہے اور ہمارے مسائل حل کیے ہیں ، بتایا گیا ہے کہ اس موقع پر وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے یقین دلاتے ہوئے کہا کہ تمام مسائل ترجیحی بنیادوں پر حل ہوں گے ، اظہر عباس چانڈیہ کی طرف سے وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار پر اعتماد کا اظہار کیا گیا ، اظہر عباس چانڈیہ نے اداروں کے خلاف تنقید کی شدید مذمت کی ، وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے کہا کہ منتخب نمائندوں کے مسائل حل کیے جائیں، مسائل کے حل میں کوئی رکاوٹ نہیں آئے گی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں