اصل ’ شین لیگ ‘ کے خالق شہباز شریف نہیں شاہد خاقان نکلے، (ن) لیگ میں ان دِنوں کیا چل رہا ہے؟ سب کچھ سامنے آگیا

اسلام آباد(نیوزڈیسک) مسلم لیگ ن میں سے نکل کر’میم‘عنقریب جیل جائے گی، ضمانت بہت جلد ختم ہوجائے گی ، شہباز شریف اور نوازشریف ایک ہی سکے کے دو رخ ہیں ، میرے خیال میں اصل ’شین‘ شاہد خاقان عباسی ہیں، آپ دیکھیں گے بہت جلد شاہد خاقان عباسی کی قد ربڑھنا شروع ہوجائے

گا ، وہ ہر طرف سے سرخرو ہوں گے اور دھل دھلا کر نکلیں گے، کیوں کہ شاہد خاقان عباسی نے ثابت کردیا کہ وہ وزیراعظم کا مٹیریل ہیں، وہ کافی حد تک قابل قبول ہیں ، ان خیالات کا اظہار اینکر پرسن مبشر لقمان نے کیا ۔اپنے یوٹیوب چینل پر گفتگو میں انہوں نے کہا کہ کہیں سے سابق وزیراعظم نوازشریف کو تھپکی ملی ہے کہ اداروں کے خلاف بولیں جو کہ بھارت کا بیانیہ ہے، جس کی وجہ سے ان پر پابندی لگے گی اور وہ عنقریب فارغ ہوجائیں گے ، سابق وزیراعظم نوازشریف جو بھی کر رہے ہیں، اس سے سب سے زیادہ نقصان ان کی اپنی جماعت کو ہورہا ہے، ان کے اپنے لوگ بھی کنفیوژن کا شکار ہیں کہ ہمارے قائد کس قسم کی باتیں کررہے ہیں، یہ تو وہ باتیں ہیں جو بھارتیوں کو کرنی چاہئیں ، وزیراعظم عمران خان کو مشورہ دیا ہے اگر نوازشریف کی طرف سے زیادہ مسائل ہیں تو ان کا پاسپورٹ اور شناختی کارڈ بلا ک کردیں ۔مبشر لقمان نے انکشاف کیا کہ ہائی کمیشن میں موجود لوگ نوازشریف کے ’پے رول‘ پر ہیں، نادرا، ایف آئی اے اور دیگر اداروں سمیت پورا سسٹم ہائی جیک ہے، نوازشریف کی میڈیکل رپورٹس بنوانے میں جس کسی کا بھی نام ہے وہ سامنے آنا چاہیئے، اور انکوائری ہو کیونکہ ایک مجرم کو ملک سے باہر نکالنے میں مدد کی گئی، ڈاکٹر یاسمین راشد کے سامنے جو رپورٹس رکھی گئیں ان میں جعلسازی کی گئی، لیکن انہوں نے تو صرف رپورٹس کی بنیاد پر ہی فیصلہ کیا ۔ اینکر پرسن نے کہا کہ نوازشریف مسلم لیگ ق کے 52 لوگوں کو توڑ فارورڈ بلاک بنایا تھا ، اب انہیں ڈر ہے کہ جیسا کیا ویسا ہی ان کے ساتھ بھی ہوگا ، اسی وجہ سے اپنی جماعت کے لوگوں کی ملاقاتوں پر پابندی لگائی ، اور 5 اراکین کو پارٹی سے بھی نکال دیا ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں