کراچی :مشہور رکن پارلیمنٹ کے بیٹے سے22 سالہ لڑکی کے تعلقات کی پراسرارکہانی ،حقائق کیا نکلے ؟ الزامات لگانے والی حسینہ کے پول کھل گئے

کراچی(ویب ڈیسک) پولیس حکام کا کہنا ہے کہ لڑکی کو اجتماعی طور پر غلط کاری کا نشانہ بنانے والا مرکزی ملزم جیکب آباد سے تعلق رکھنے والے مرحوم پارلیمنٹیرین کا بیٹا ہے۔ نجی ٹی وی کی ایک رپورٹ کے مطابق گزشتہ روز ایک خبر گردش کررہی تھی کہ کراچی کے علاقے کلفٹن میں 2 ملزمان

نے 22 سالہ لڑکی کو مبینہ طورپر اپنی ہوس کا شکار بنانے کے بعد اسے فٹ پاتھ پر پھینک کر فرار ہوگئے، تاہم اب اس کیس کا معمہ حل ہوگیا ہے اور پولیس نے ابتدائی رپورٹ میں انکشاف کیا ہے کہ لڑکی سے زبردستی نہیں کی گئی۔پولیس حکام کے مطابق پولیس نے سی سی ٹی وی فوٹیج کی مدد سے تفتیش کی تو پتہ چلا کہ لڑکی کے ساتھ غلط کاری کے اس کیس کا مرکزی ملزم جیکب آباد سے تعلق رکھنے والے مرحوم پارلیمنٹیئرئن کا بیٹا ہے، تاہم متاثرہ لڑکی کو زبردستی لے جایا نہیں کیا گیا بلکہ وہ خود اپنی مرضی سے ملزم کے ساتھ گئی تھی۔پولیس حکام نے بتایا کہ سی سی ٹی فوٹیج میں واضح طور پر دیکھا جاسکتا ہے کہ سفید رنگ کی ویگو گاڑی کو سی ویو کے قریب سڑک پررکی اور کچھ سینکڈ کے بعد لڑکی گاڑی سے اتری، لڑکی نے سیاہ رنگ کے کپڑے پہن رکھے ہیں اور اس کے ہاتھ میں ایک شاپنگ بیگ بھی ہے۔ جب کہ واقعے کامقدمہ درج ہونے کے بعد بھی متاثرہ لڑکی اورملزم کے درمیان رابطہ ہوا ہے۔