ملک سے گیس کی قلت ہمیشہ کے لیے ختم ہونے کا وقت!حکومت کا دوبارہ سے سمندر میں گیس کے ذخائر کی تلاش کا کام شروع کرنے کا اعلان، تاریخ سامنے آگئی

اسلام آباد (نیوز ڈیسک ) مشیر پٹرولیم ندیم بابر کا کہنا ہے کہ رواں سال دسمبرمیں سمندر میں دوبارہ گیس ذخائر کی تلاش شروع کی جائے گی، سوئی نادرن کا شاٹ فال بڑھ گیا ہے، سوئی گیس کمپنی کو ایل این جی پرلانا ہوگا۔ تفصیلات کے مطابق وزیراعظم کے مشیر پٹرولیم ندیم بابر

کا کہناہے حکومت رواں سال دسمبرمیں دوبارہ گیس کے ذخائر کی تلاش شروع کرے گی۔ان کا کہنا ہے کہ سوئی نادرن مں شاٹ فال بھی بڑھ گیا ہے جس کی وجہ سے سردیوں میں گیس کی لوڈ شیڈنگ کی جائے گی۔ ملک میں گیس کے نئے ذخائر تلاش ہونے تک گیس کا شاٹ فال جاری رہنے کے امکان ہیں اس لیے اب وقت آگیا ہے کہ سوئی گیس کمپنی کو ایل این پر منتقل کیا جائے جبکہ مزید ذخائر بھی تلاش کیے جائیں، تاکہ ملک میں گیس کی لوڈ شیڈنگ میں کمی لائی جاسکے۔ان کا مزید کہنا ہے کہ پٹرولیم میں محصولات کی کمی کو پورا کرنے کےلیے لیوی ٹیکس میں اضافہ کرنا مجبوری تھی، یہ فیصلہ مجبوری کے تحت کیا ہے۔ دوسری جانب گیس کی لوڈشیڈنگ کے حوالے سے وفاقی وزیر توانائی عمرایوب کا کہنا ہے کہ سوئی سدرن اور سوئی نادرن کے گھریلوصارفین کی جانب سے طلب میں 20فیصداضافہ ہواہے۔ گزشتہ سال دسمبر2019 کے مقابلے میں اب 12 فیصد سے زائد اضافی گیس مہیا کی جا رہی ہے،سوئی ناردرن نے گھریلو صارفین کو 47 فیصد زائد گیس سپلائی کی، تاہم طلب میں اضافے کی وجہ سے لوڈشیڈنگ میں بھی اضافہ ہوا ہے۔ دوسری جانب ماہرین کا کہنا ہے کہ ایل این جی پرسوئی گیس کو منتقل کرنے پر قیمتوں میں اضافہ ہونے کا خدشہ ہے۔