اہم ترین اماراتی شہزادہ انتقال کر گیا

دُبئی (نیوز ڈیسک) اس وقت اماراتی مملکت میں سوگ کا سماں ہے۔ شاہی خاندان اور اماراتی عوام دُکھ سے دوچار ہیں۔ اس کی وجہ اُم القوین ریاست کے شاہی خاندان سے تعلق رکھنے والے اہم فرد کا گزشتہ روز انتقال کر جانا ہے۔ سوشل میٰڈیا صارفین کا کہنا ہے کہ یہ خدا کا عذاب ہے جو کہ امراتای شاہی خاندان پر نازل ہورہا ہے اور فلسطینیوں کی آہوں نے اثر دکھانا شروع کر دیا ہے.

شاہی خاندان کی جانب سے جاری ایک بیان میں بتایا گیا ہے کہ حکمران خاندان سے تعلق رکھنے والے اُم القوین کے شہزادے شیخ علی بن حمید بن احمد المعلیٰ ٹریفک حادثے میں انتقال کر گئے ہیں۔شاہی ایوان کی جانب سے جاری اعلان کے مطابق آج صبح شیخ علی بن حمید کی گاڑی کو خوفناک حادثہ پیش آیا جس کے نتیجے میں وہ جاں بحق ہو گئے ہیں۔ ان کی نماز جنازہ اور تدفین کے وقت کا اعلان کچھ دیر میں کیا جائے گا۔ مرحوم شیخ علی اماراتی سپریم کونسل کے ممبر بھی تھے۔ا ن کا شمار شاہی خاندان کی ممتاز شخصیات میں ہوتا تھا۔ اماراتی عوام نے بھی اس دْکھ بھری خبر پر سوشل میڈیا چینلز کے ذریعے شاہی خاندان سے تعزیت کا اظہار کیا۔اماراتی عوام اور تارکین وطن نے اپنے سوشل میڈیا پیغامات سے اللہ تعالیٰ سے دْعا کی ہے کہ پروردگار سوگوار خاندان کو اس صدمے کے دوران صبرِ جمیل عطا فرمائے۔مرحوم کے ایصالِ ثواب اور اْنہیں جنت الفردوس میں اعلیٰ مقام حاصل کرنے کے لیے خصوصی دُعا بھی کی گئی ہے۔ اُم القوین کے فرمانروا عزت مآب شیخ سعود بن راشد المعلیٰ سے مختلف شخصیات کی جانب سے رابطہ کر کے اُن سے تعزیت کا اظہار کیا جا رہا ہے۔واضح رہے کہ رواں سال فروری کے مہینے میں بھی اُم القوین کے شاہی خاندان کے ایک شہزادے شیخ محمد بن حُمید بن عبدالرحمان الشمسیانتقال فر ما گئے تھے۔شیخ محمد بن حمُید کے انتقال کا اعلان خود اُم القوین کے فرمانروا عزت مآب شیخ سعود بن راشد المعلیٰ نے کیا تھا ۔اُن کی نمازہ جنازہ شیخ احمد بن راشد المعلیٰ مسجد میں ادا کرنے کے انہیں سپرد خاک کر دیا گیا تھا۔ مرحوم کی نماز جنازہ بھی دیگر ریاستوں کی شاہی شخصیات کے علاوہ، سرکاری ملازمین، اہم کاروباری شخصیات اور مختلف شعبہ ہائے زندگی سے تعلق رکھنے والے افراد نے بھی شرکت کی تھی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں