یا اللہ تو ہی کارساز ہے ۔۔۔ تباہ حال بیروت بندرگاہ سے 4 ٹن سے زائد بارود برآمد، اتنے بڑے دھماکے میں یہ بارود کیسے نہ پھٹا؟ جان کر آپ بھی اللہ اکبر کہہ اٹھیں گے

بیروت(ویب ڈیسک) لبنانی فوج نے قیامت خیز دھماکوں سے تباہ حال دارالحکومت کی بندرگاہ سے 4 ٹن سے زائد بارود برآمد کیا ہے۔ غیرملکی خبر رساں ادارے کے مطابق بندرگاہ کے داخلی راستے سے دھماکا خیز کیمیائی مواد ملا ہے اور فوج کے انجینئرز اس کا جائزہ لے رہے ہیں۔ کیمیائی مواد بندرگاہ کے داخلی راستہ

نمبر 9سے برآمد ہوا ہے اور اس کی مقدار 4 اعشاریہ 37 ٹن بتائی جاتی ہے۔واضح رہے کہ گزشتہ ماہ لبنان کے دارالحکومت بیروت کی بندرگاہ کے میں 2750 ٹن کمیائی مواد کے پھٹنے سے شہر میں قیامت برپا ہوگئی تھی۔ دھماکے کے نتیجے میں شہر کی تمام عمارتیں بری طرح متاثر ہوگئی تھیں جب کہ واقعے میں 190 جانیں گئیں اور 6 ہزار سے زائد افراد زخمی ہوئے۔قیامت خیز دھماکے کے بعد بیروت میں عوامی احتجاج پھوٹ پڑے تھے جس کے نتیجے میں وزیر اعظم سمیت کابینہ کو مستعفی بھی ہونا پڑا۔ یہ اتنا بڑا زخیرہ اتنے بڑے دھماکے کے بعد کیسے پھٹنے سے بچ گیا اس پر تمام تحقیقاتی انجینئر حیرت میں مبتلا ہیں اور یقین نہیں کر پا رہے کہ ایسا کیسے ممکن ہے ۔ نمبر 9سے برآمد ہوا ہے اور اس کی مقدار 4 اعشاریہ 37 ٹن بتائی جاتی ہے۔واضح رہے کہ گزشتہ ماہ لبنان کے دارالحکومت بیروت کی بندرگاہ کے میں 2750 ٹن کمیائی مواد کے پھٹنے سے شہر میں قیامت برپا ہوگئی تھی۔ دھماکے کے نتیجے میں شہر کی تمام عمارتیں بری طرح متاثر ہوگئی تھیں جب کہ واقعے میں 190 جانیں گئیں اور 6 ہزار سے زائد افراد زخمی ہوئے۔قیامت خیز دھماکے کے بعد بیروت میں عوامی احتجاج پھوٹ پڑے تھے جس کے نتیجے میں وزیر اعظم سمیت کابینہ کو مستعفی بھی ہونا پڑا۔ یہ اتنا بڑا زخیرہ اتنے بڑے دھماکے کے بعد کیسے پھٹنے سے بچ گیا اس پر تمام تحقیقاتی انجینئر حیرت میں مبتلا ہیں اور یقین نہیں کر پا رہے کہ ایسا کیسے ممکن ہے ۔

یا اللہ تو ہی کارساز ہے ۔۔۔ تباہ حال بیروت بندرگاہ سے 4 ٹن سے زائد بارود برآمد، اتنے بڑے دھماکے میں یہ بارود کیسے نہ پھٹا؟ جان کر آپ بھی اللہ اکبر کہہ اٹھیں گے” ایک تبصرہ

اپنا تبصرہ بھیجیں