پینٹاگون کے اعلان نے پوری دنیا کو چونکا دیا

واشنگٹن(ویب ڈیسک) سی پیک کا مقصد چین کا اسٹریٹجک چوک پوائنٹس پر انحصار کم کرنا ہے، چین کی یہ لڑائی کی حکمت عملی امریکہ کوقبول نہیں۔ اطلاعات کے مطابق امریکی فوج کی مشترکہ کمانڈ اینڈ کنٹرول تنظیم پینٹاگون نے ایک رپورٹ میں کہا ہے کہ ون بیلٹ ون روڈ (او بی او آر) پالیسی کے

تحت چین پاکستان میں منصوبے تعمیر کررہا ہے جس سے بیجنگ کا اسٹریٹجک چوک پوائنٹس پر انحصار کم ہوجائے گا۔ ذرائع کے مطابق پینٹاگون کی چین کی فوجی طاقت کے حوالے سے رپورٹ برائے سال 2020 ظاہر کرتی ہے پیپلز لبریشن آرمی (پی ایل اے) نے بحریہ کے حجم، زمینی میزائل اور جدید فضائی نظام دفاع میں امریکی فوج کو پیچھے چھوڑ دیا ہے۔ رپورٹ میں بینجنگ کی اقتصادی پالیسی سے متعلق باب میں کہا گیا کہ پاک چین اقتصادی راہداری (سی پیک) منصوبے پائل لائن اور بندرگاہ کی تعمیر پر مرکوز ہیں جو توانائی کے وسائل کی نقل و حمل کے لیے چین کا اسٹریٹجک چوک پوائنٹس مثلاً آبنائے ملاکا پر چین کا انحصار کم کردے گا۔ رپورٹ میں کہا گیا کہ 2013 میں شروع کیا گیا او بی او آر چین کے ارد گرد موجود اور دیگر ممالک کے ساتھ قریبی معاشی انضمام کو فروغ دینے کی کوشش ہے اس طرح ان ممالک کے مفادات بیجنگ کے ساتھ منسلک کرنے کی تشکیل کی جائے گی۔رپورٹ میں مزید کہا گیا کہ او بی او آر کا مقصد ان معاملات کے حوالے سے چین کے نقطہ نظر پر ہونے والی تنقید کو بھی دور کرنا ہے جنہیں وہ حساس سمجھتا ہے۔ پینٹاگون کی رپورٹ میں کہا گیا کہ چین کے عالمی اقتصادی اثرات بھی اس کے مفادات کو شریک ممالک میں سیاسی تبدیلیوں کے لیے کمزور بنا رہے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں