عمران خان کے دور حکومت میں 6000 غیر ملکیوں کو ویزے جاری کرنے میں کیا کارروائی ڈالی گئی ، کون کون مستفید ہوا ؟ حیران کن انکشاف

اسلام آباد(ویب ڈیسک)وزارت داخلہ میں غیر ملکیوں کو خلاف ضابطہ ویزوں کے اجرا کا انکشاف ہوا ہے۔ذرائع کے مطابق گزشتہ ڈیڑھ سال میں ہزاروں غیرملکی شہریوں کو ویزوں کے اجرا میں فراڈ اور بے ضابطگیاں سامنے آئی ہیں۔سرکاری دستاویزات میں بتایا گیا ہے کہ غیرملکیوں کو جاری 6000 ویزوں میں پالیسی اور طریقہ پر

عمل نہیں کیا گیا جب کہ ابتدائی تحقیقات میں 105 ویزے اب تک بوگس قرار پائے ہیں۔سرکاری دستاویز کے مطابق 13000 سے زائد چینی اور افغان شہریوں کو جاری ویزوں کی تحقیقات ہو رہی ہیں اور وزارت داخلہ میں اعلیٰ سطح کمیٹی کی جانب سے معاملے پر 12 سرکاری ملازمین کے خلاف تحقیقات کی جارہی ہیں۔دوسری جانب ایک خبر کے مطابق حالیہ بارشوں کے نتیجے میں پاکستان ریفائنری کی پائپ لائن کو شدید نقصان پہنچا ہے جس کے باعث پاکستان ریفائنری نے عارضی شٹ ڈاؤن کا خدشہ ظاہر کیاہے۔تفصیلات کے مطابق پاکستان ریفائنری نے عارضی شٹ ڈاؤن کا خدشہ ظاہر کر دیا ہے، کراچی میں شدید بارشوں سے ریفائنری کی پائپ لائن کو بہت نقصان پہنچا ہے، اس سلسلے میں پاکستان ریفائنری کی جانب سے اسٹاک ایکسچینج کو ایک خط بھی لکھا گیا ہے۔ترجمان پاکستان ریفائنری کے مطابق حالیہ بارشوں سے انٹر سٹی آئل پائپ لائن شدید متاثر ہو گئی ہے، جس سے کیماڑی ٹرمینل سے کورنگی کریک کو سپلائی رک گئی ہے۔ترجمان نے بتایا کہ فی الوقت پائپ لائن کو ہونے والے نقصانات کا جائزہ لیا جا رہا ہے، جس کے بعد پائپ لائن کی بحالی کا ٹائم فریم دیا جا سکے گا۔پاکستان ریفائنری کی جانب سے اسٹاک ایکسچینج کے جنرل منیجر کو لکھے گئے خط میں کہا گیاہے کہ گزشتہ روز25اگست کو کراچی میں ہونے والی غیر معمولی تیز بارش سے پائلز برج کا ایک حصہ بہہ گیا ہے، جو کمپنی کی شہر کے اندر آئل پائپ لائن کو لے کر جاتا ہے، اور جو خام تیل اور پروڈکٹس کی ترسیل کے لیے کیماڑی ٹرمنل کو کورنگی کریک پر واقع ریفائنری سے جوڑتا ہے، واقعے میں مذکورہ پائپ لائنز کو شدید نقصان پہنچا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں