یہ ہوئی ناں بات :

میانوالی (ویب ڈیسک) صوبہ پنجاب کے شہر تلہ گنگ سے باہر میانوالی روڈ پر قائم اسلامی تعلیم کے ادارے کے طلباء نے ترکی میں ہونے والے ٹیکنالوجی کے سب سے بڑے فیسٹول ’ٹیکنوفیسٹ‘میں نمایاں نمبروں سے فائنل راؤنڈ تک رسائی حاصل کر کے پاکستان کا نام عالمی سطح پر روشن کردیا۔اس ادارے کی ٹیم چار

طلباء پر مشتمل ہے، جنہوں نے ٹیکنوفیسٹ 2020 کی پروجیکٹ ڈیٹیل رپورٹ میں سب سے زیادہ نمبر حاصل کیے ہیں یعنی یہ طلباء 100 میں سے 87 نمبر حاصل کر کے ٹاپ پوزیشن پر براجمان ہیں۔رواں سال ترکی کے شہر استنبول میں ٹیکنوفیسٹ کا انعقاد 22 سے 27 ستمبر تک کیا جارہا ہے جس میں پاکستان کی نمائندگی کرنے والے طالب علم ٹاپ پوزیشن پر ہیں۔23 کیٹیگریز پر مشتمل اس فیسٹول میں پاکستانی طالب علم ٹیکنالوجی فار ہیومینیٹی کی کیٹیگری میں شامل ہیں۔اس سے قبل بھی بیت السلام تلہ گنگ نے پاکستان میں کئی دیگر مقابلوں میں شرکت کی اور کامیابیاں بھی حاصل کیں۔ ٹیکسلا یونیورسٹی کا آئی ٹیک کمپٹیشن اور غلام اسحاق خان یونیورسٹی کا مقابلہ سرفہرست ہے۔ٹیکنوفیسٹ ایشیا کا سب سے بڑا ٹیکنالوجی اینڈ اسپیس فیسٹول ہے جس کا انعقاد ترکی کے شہر استنبول میں سرکاری سطح پر کیا جاتا ہے۔رواں برس ہونے والا ’ٹیکنو فیسٹ‘ رپبلک آف ترکی کی وزارت صنعت اور ٹیکنالوجی کے زیر صدارت منعقد کیا جارہا ہے جبکہ ساتھ ہی اس فیسٹیول میں ترکش ٹیکنالوجی ٹیم فاؤنڈیشن (ٹی3) اشتراکی طور پر اہم کردار ادا کررہی ہے۔اس فیسٹول کے انعقاد کا مقصد ترکی کو اپنے اہم سائنسی اداروں کی مدد سے ایک ٹیکنالوجی پروڈیوسنگ سوسائٹی کی طرف لیکر جانا ہے جس سے ترکی کو سائنس کے شعبے میں مزید ترقی کے امکانات روشن ہوسکتے ہیں۔یہ فیسٹول محض ترکی کے طالبعلموں کے لیے ہی مختص نہیں ہے بلکہ یہ پوری دنیا کے ٹیکنالوجی کی دنیا سے وابستہ طالب علموں کے لیے ہے۔پوری دنیا میں سائنس کے شعبے میں کوئی اچھوتی ایجاد کرنے والے طالب علم اس فیسٹول میں شرکت کرسکتے ہیں اور اس میں حصہ بھی لے سکتے ہیں اور اپنی نئی نئی جدید سائنسی تجرباتی چیزوں کی رونمائی بھی کرسکتے ہیں۔