جان چھڑکنے والی بیوی نے لائیو ٹی وی شو کے دوران خاوند کے پیروں کو بوسہ دے دیا، کیا ایسا کرنا جائز ہے ؟

الجزائر(مانیٹرنگ ڈیسک) میاں بیوی کا رشتہ ایسا رشتہ ہے جو زندگی کی آخری سانس تک قائم رہتا ہے۔ اگر میاں بیوی ایک دوسرے کے ہمدرد اور غم گُسار ہوں تو ان کی اور اولاد کی زندگی دُنیاوی جنت کا عملی نمونہ بن جاتی ہے۔ خاوند وفادار اور خیال رکھنے والا ہو تو بیوی بھی اس کے صدقے واری جاتی ہے۔ ایسی ہی اپنے خاوند کی عاشق خاتون کا انکشاف ہو اہے جس نے ایک لائیو ٹی وی شو کے دوران زمین پر جھُک کر اپنے خاوند کے پیروں کو بوسہ دے ڈالا

جس نے پروگرام میں موجود حاضرین اور تمام ٹی ناظرین کو حیران پریشان کر ڈالا۔ سعودی اخبار المرصد کے مطابق الجزائری ٹی وی پر ازدواجی معاملات و مسائل کے حوالے سے ایک لائیو پروگرام چل رہا تھا۔ جس میں ایک جوڑے کو بھی مدعو کیا گیا تھا۔ اس موقع پرایک عالم دین نے کہا کہ اگر کوئی خاتون شوہر کی محبت، وفاداری اور احترام کے اظہار میں اس کے پیر چُومتی ہے تو یہ شرک میں نہیں آتا۔ کیونکہ یہ ایک ازدواجی محبت کے اظہار کا معاملہ ہے۔ یہ بات سُن کر خاتون اپنی سیٹ سے اُٹھی اور ساتھ والی سیٹ پر بیٹھے خاوند کے آگے گھٹنوں کے بل جھُک گئی اور اس کے پیروں کو بوسہ دے ڈالا۔خاوند نے اس موقع پر اپنے پاؤں پیچھے کرنے کی کوشش کی، مگر خاتون نے اس کے پیروں کو چُوم ہی لیا۔ لائیو پروگرام میں خاتون کی اس حرکت نے سب کو پریشان کر ڈالا۔ الجزائری خاتون نے اس موقع پر کہا ” میں نے یہ کام اپنے خاوند کے لیے احسان مندی اور شکریئے کے جذبات کے طور پر کیا ہے۔میں چاہتی تھی کہ چالیس لاکھ الجزائری مجھے اپنے خاوند کو احترام دینے کا نظارہ اپنی آنکھوں سے دیکھ سکیں۔ میرے خاوند نے مجھے وہی توجہ اور محبت دی ہے، جیسی کہ ایک ماں اپنی اولاد کو دیتی ہے۔ میرا خاوند میرے لیے والدین جتنا ہی قابل احترام ہے۔ “ جونہی خاتون نے اپنے خاوند کے پاؤں ، ہاتھ اور سر کو چُوما تو خاوند کی آنکھوں سے خوشی اور جذبات کے مارے آنسو بہنا شروع ہو گئے۔اینکر نے اس موقع پر امام صاحب سے سوال کیا کہ کیا خاتون کا یہ فعل شرک کے مترادف نہیں تو عالم دین نے جواب دیا کہ نبی کریم کا بھی فرمان ہے کہ اگر اللہ تعالیٰ نے اپنی ذات کے علاوہ کسی اور کو بھی سجدہ کرنے کا حکم دیا ہوتا تو میں خواتین کو اپنے شوہروں کو سجدہ کرنے کا حکم دیتا۔ تاہم سوشل میڈیا صارفین میں خاتون کی اس حرکت پر ایک بحث چھڑ گئی ہے۔ کچھ صارفین نے خاتون کی اس حرکت کو نامناسب قرار دیا جبکہ بہت سے صارفین نے اسے ازدوامی محبت کا ایک بھرپور اظہار قرار دیا ہے۔