کپتان نے اپنا کہا سچ کر دکھایا ۔۔۔ پاکستانی پاسپورٹ میں کتنے درجے بہتری آ گئی ؟ پاکستانیوں کا سینہ چوڑا کر دینے والی خبر

اسلام آباد(ویب ڈیسک)وفاقی وزیر مواصلات مراد سعید نے کہا ہے کہ موجودہ حکومت نے 5 ہزار ارب کاقرضہ واپس کیاہے، تجارتی خسارہ10ارب ڈالر تھاجس میں ہم کمی لےکر آئے ہیں۔میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مراد سعید نے کہا کہ پاکستان کےپاسپورٹ میں6درجےبہتری آئی ہے، اسٹاک مارکیٹ اس وقت دنیا کی تیسری تیز ترین اسٹاک مارکیٹ ہے

ہمارے دور میں برآمدات میں26 فیصداضافہ ہوا ہے۔انہوں نے کہا کہ اپوزیشن کےپیداکردےمسائل کاخمیازہ ہم بھگت رہےہیں، اپوزیشن کے وزیرخزانہ تو ملک سےفرار ہیں، اپوزیشن کےارسطو بس یہ ہی بات کرتےہیں ہم نےسوچاتھا، مفتاح اسماعیل کہتےتھےپی آئی اے خریدنے والے کو اسٹیل مل مفت دیں گے۔مراد سعید نے حکومتی کامیابیوں کا ذکر کرتے ہوئے بتایا کہ حکومت نے 5 ہزار ارب کاقرضہ واپس کیاہے، تجارتی خسارہ10ارب ڈالر تھاجس میں ہم کمی لےکر آئے ہیں۔وفاقی وزیر نے کہا کہ ہم نےاداروں میں اصلاحات شروع کیں جس پرکام جاری ہے، اداروں میں ریفارمزہورہی ہیں توموجودہ حکومت کررہی ہے، پاکستان کےپاسپورٹ میں6درجےبہتری آئی ہے اور میں برآمدات میں26 فیصداضافہ ہوا ہے۔جبکہ دوسری جانب ایک خبر کے مطابق پی ٹی آئی حکومت 10 ہزار ارب کا قرض لے چکی ہے۔ اس حوالے سے اسٹیٹ بینک آف پاکستان نے اپنی رپورٹ جاری کر دی ہے جس میں بتایا گیا ہے کہ وفاقی حکومت کا قرض مئی کے آخر تک اوسطاً 14.2 ارب یومیہ کے حساب سے 34.5 کھرب روپے ہو گیا ہے۔ اس کے علاوہ مزید بتایا گیا ہے کہ 34۔5 کھرپ روپے کا قرض ان واجبات کے علاوہ ہے جس کیلیے حکومت بالواسطہ قرض دہندگان کے مقروض ہے، اس طرح مجموعی ملکی قرض مرکزی حکومت کے قرض سے کہیں زیادہ ہے ،جس کے اعداد و شمار اگلے ماہ دستیاب ہوں گے۔رپورٹ میں مزید بتایا گیا ہے کہ ضمنی گرانٹ کے بجٹ کی کتاب سے ظاہر ہوا ہے کہ پاکستان تحریک انصاف کی حکومت نے گزشتہ مالی سال میں مئی سے جون تک قرضہ لیا، اس میں کورونا کے خلاف 289.4 ارب روپے خرچ کئے گئے جو 6 فیصد بنتا ہے۔